يورپى ممالك ميں بسنے والى مسلمان خواتین كے ليے نصحيت


بسم اللہ الرحمن الرحیم

ہمارے معاشرے میں لوگ اکثر غربت سے تنگ آکر بیرون ملک جاتے ہیں اور پھر وہاں ہی کے ہو کر رہ جاتے ہیں۔ یا تو وہ اس ملک کی شہریت کے حصول کے لئے وہاں کسی مقامی خاتون سے شادی کرتے ہیں یا پھر پاکستان میں شادی کر کے اپنی زوجہ اور بچوں سمیت بیرون ملک منتقل ہوجاتے ہیں۔ اور انکی اولادیں وہاں کے ماحول میں آنکھیں کھولتے اور پرورش پاتے ہیں۔ اکثر جن ملکوں کا رخ کیا جاتا ہے وہ یورپی ممالک ہوتے ہیں ، ہاں ایک بڑی تعداد خلیجی عرب مسلم ریاستوں میں بھی اپنا پڑاو ڈالتی ہے مگر یہاں وہ خطرات قطعا درپیش نہیں جو یورپ کے کفریہ اور غلیظ معاشرے میں ان حضرات کے بچوں کو درپیش ہوتے ہیں۔ یہ خطرات دینی و دنیاوی دونوں ہی قسم کے ہوتے ہیں اور یورپی معاشرے بچوں کی تربیت میں والدین کا محدو کردار ان خطرات میں شدید اضافہ کا باعث بنتا ہے۔ ویسے تو یہ خطرات مسلمان نوجوان مردوں اور خواتین دونوں کو درپیش ہوتے ہیں مگر مسلمان بچیاں ان تباہ کاریوں کا آسانی سے شکار ہو جاتی ہیں اور اپنی دنیا اور آخرت برباد کر بیٹھتی ہیں۔ ہم یہاں اس مختصر تحریر میں اپنی اسلامی ماوں ، بینوں اور بیٹیوں کو چند نصیحتیں کرنا چاہتے ہیں تاکہ وہ اس کفریہ غلیظ معاشرے میں رہتے ہوئے اپنی دنیا اور آخرت کی بربادی کا سامان خود اپنے ہاتھ سے کرنے سے محفوظ ہوجائیں

 

نصائح

 

1 – سب سے پہلى چيز آپ پر يہ واجب ہوتى ہے كہ آپ اس كفريہ ملك كو خيرباد كہہ ديں؛ كيونكہ نبى كريم صلى اللہ عليہ وسلم مشركوں كے مابين رہنے والے شخص سے برى ہيں، اس ليے آپ كا كفريہ ملك ميں رہنا حرام ہے، اور خاص كر جب آپ لوگ وہاں صرف ملازمت اور كام كاج كى وجہ سے رہ رہے ہوں، يہ كوئى ايسا شرعى عذر نہيں جس كى بنا پر آپ كا وہاں رہنا جائز ہوتا ہو.

2 – آپ كو چاہيے كہ اپنے دين اور اپنى عزت و عصمت اور ستر پوشى كے ليے اپنے قريب ترين كسى اسلامى ملك كا انتخاب كريں، يہ معلوم ہونا چاہيے كہ اس وقت اسلامى ممالك بھى ان معاملات ميں ايك دوسرے سے مختلف ہيں، افسوس كے ساتھ كہنا پڑتا ہے كہ آپ كے ليے ہر اسلامى ملك ميں رہنا ممكن نہيں، بلكہ يہ آپ كى نيشنيلٹى اور ملك كے قوانين كے تابع ہے.

3 – اگر آپ اس ملك سے كہيں اور نہ جا سكتى ہوں تو پھر آپ كو اللہ تعالى كا تقوى اختيار كرتے ہوئے اپنے ہر معاملے ميں اللہ تعالى كے احكام كى سختى سے پاپندى كرنا ہوگى، اور اس ميں سب سے پہلى چيز يہ ہے كہ آپ اس ملك ميں رہتے ہوئے اپنے خاندان اور گھر كو ضائع ہونے اور كھلى آزادى سے بچانے كى حرص ركھيں، كيونكہ وہاں كے قوانين غلط قسم كے افراد كى معاونت كرتے ہيں، اس ليے آپ پر اپنى اولاد بيٹے اور بيٹيوں كى صحيح اسلامى تربيت بہت اہتمام كے ساتھ كرنا ہوگى، اور اس كے ساتھ ساتھ انہيں اسلامى تاريخ سے بھى وابسطہ ركھيں، اور انہيں شرعى احكام كى تعليم ديں، اور ان كو عربى زبان كى پختگى كرائيں.

4 – يہ بہت اہم اور ضرورى ہے كہ مسلمان افراد كے گھرانے اور رہائش فسق و فجور والى جگہوں سے دور ہوں، اور مسلمان خاندانوں كا ايك ہى جگہ اكٹھے ہو كر رہائش اختيار كرنا بہت ضرورى ہے تا كہ وہ ايك دوسرے سے معاونت اورتقويت حاصل كر سكيں، اور اللہ تعالى كى اطاعت و فرمانبردارى ميں ايك دوسرے كى معاونت كريں، تو اس كے نتيجہ ميں ان كى اپنى اور اولاد كى بھى تربيت بھى بہتر ہوگى.

5 – آپ كے ليے حرام ہے كہ آپ اپنى اولاد كى باگ ڈور چھوڑ ديں اور وہ كفار كى اولاد كے ساتھ تعلقات استوار كرتے پھريں، اور آپ كے ليے جائز نہيں كہ اپنى اولاد كو اخلاق سے گرى ہوئى فلميں اور پروگرام ديكھنے ديں جو ان كے اخلاق كو تباہ كر كے ركھ ديں، اور اسى طرح ان كى تعليم و تدريس كا مراقبے كا اہتمام بھى ضرورى ہے تا كہ ان كے افكار گمراہ نہ ہوں اور وہ اپنے دين كو ہى كھو بيٹھيں.

6 – آپ كے ليے ضرورى ہے كہ اپنے مسلمان خاندانوں اور گھرانوں كے ليے كچھ اوقات مقرر كريں چاہے قليل سا وقت ہى ركھيں جس ميں سارا خاندان جمع ہو كر ايك دوسرے سے ملے تا كہ ايك دوسرے كى متابعت اور ركھوالى ہو سكے، اور ہر ايك اپنے گھرانے كى مشكلات سے واقف ہو قبل اس كے كہ وہ اس كے خاندان كو كسى مشكل ميں ڈال دے، يا وہ اسے حل كرنے كے قابل ہى نہ رہے.

7 – اسى طرح آپ كے ليے يہ بھى ضرورى ہے كہ آپ اپنے گھرانوں كے ليے اچھے دوست اور سہيلياں تلاش كريں جن سے مل جل كر رہيں؛ كيونكہ خدشہ ہے كہ اگر دوست اور سہيلياں اچھى نہ ہو تو اس كا خاندان كے افراد پر سلبى اور منفى اثر پڑتا ہے، جس سے آپ كى تربيت و راہنمائى كى سارى كوششيں رائيگاں ہو كر رہ جائيں.

8 – آپ كو اس يورپى ترقى اور اس كے اخلاق سے اپنے اور اپنى اولاد كے دلوں ميں نفرت اور بغض پيدا كرنا ہوگا، اور انہيں يہ بتانا ہوگا كہ يہ شريعت اسلاميہ اور فطرت سليمہ كے بھى مخالف ہيں، اور اس كى ان كے سامنے مثاليں بھى ركھنا ہونگى.

اور اس كے مقابلہ ميں انہيں اسلامى تھذيب و تمدن اور اخلاق كريمہ كے ساتھ مربوط كريں، اور انہيں يہ بتائيں كہ يہاں اور اس كفريہ ممالك ميں آپ لوگوں نے طويل عرصے تك نہيں رہنا.

9 – آپ بلد حرام مكہ مكرمہ كى زيارت كثرت سے كيا كريں، اور ہر برس حج كى سعادت حاصل كرنے كى حرص ركھيں، اور اگر ميسر ہو سكے تو سال ميں ايك سے زيادہ عمرے بھى كيا كريں، تا كہ آپ لوگوں كا ايمان قوى اور مضبوط ہو، اور آپ كى اولاد كے دل اسلام اور مسلمانوں كے ساتھ معلق ہوں، افسوس كے ساتھ كہنا پڑتا ہے كہ ديكھا گيا ہے كہ كفار كے ممالك ميں بسنے والى مسلمان كيمونٹى كے لوگ اس سلسلے ميں بہت ہى زيادہ كوتاہى كے شكار ہيں.

10 – ايك اسلامى لائبريرى قائم كريں جہاں اسلامى كتابيں، اور كيسٹيں اور سى ڈيز وغيرہ ہوں تا كہ خاندان كے افراد اپنے دين سے وابسطہ رہيں، اور شرعى احكام كو جاننے كے ليے آسانى پيدا ہو سكے، اور انہيں گمراہ كرنے اور جہالت ميں دھكيلنے والے راستوں كو بند كيا جا سكے اور انہيں فساد سے دور ركھا جائے، كاش ” المجد ” ٹى چينل آپ اپنے گھروں ميں ديكھيں، كيونكہ يہ چينل نافع علم پيش كرتا ہے، اور اس چينل والوں كى كوشش ہوتى ہے كہ كسى بھى پروگرام ميں كوئى موسيقى نہ ہو، اور اسى طرح عورتيں بھى نہ لائى جائيں، اور اسى طرح آپ خاندان كے افراد كو اسلامى ويب سائٹس سے مربوط كريں.

حقيقت ميں نصيحتيں تو بہت زيادہ ہيں، اور اس كى كثرت كا سبب يہ ہے كہ كفار كے ممالك ميں گمراہى اور فساد فسق و فجور كى كوئى حد نہيں، زندگى كے ہر شعبہ اور موڑ پر وعظ و نصحيت اور راہنمائى كى ضرورت پيش آتى ہے، ليكن جو كچھ ہم پہلے كہہ چكے ہيں وہ بہت سى نصيحتوں كو اپنے اندر سموئے ہوئے ہے وہ يہ كہ:

اس كفريہ ممالك سے نكل كر كسى اسلامى ملك ميں بود و باش اختيار كر لى جائے، اور جو شخص ان كفريہ ممالك ميں باقى رہے اسے يہ علم ہونا چاہيے كہ روز قيامت اللہ تعالى اس سے اس كى رعايا اور اس كى ذمہ دارى ميں جو افراد رہ رہے ہيں ان كے متعلق سوال كريگا، لہذا اسے اس كا جواب تيار كر لينا چاہيے.

اللہ تعالى سے ہمارى دعا ہے كہ وہ آپ كے ليے ان ممالك سے نكلنے ميں آسانى پيدا فرمائے، اور آپ لوگوں كو دين اسلام اور ہدايت پر ثابت قدم ركھے، اور آپ كو ہدايت و راہنمائى كى توفيق سے نوازے، اور آپ كو اولادوں كى اصلاح فرمائے، اور انہيں دين اسلام كا داعى بنائے.

اللہ تعالى ہى توفيق دينے والا ہے.

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: