روزےدارمریض کےلیےشریعت میں کیاحکم ہے؟ کیا اسکےلیےروزہ توڑنا جائز ہےاورمرض کیوجہ سےروزہ توڑنا درست ہے؟


سوال:

روزےدارمریض کےلیےشریعت میں کیاحکم ہے؟ کیا اسکےلیےروزہ توڑنا جائز ہےاورمرض کیوجہ سےروزہ توڑنا درست ہے۔ (ر ۔ ا ۔ راولپنڈی)

 

الجواب بعون الوھاب

الحمد للہ والصلوۃ والسلام علی رسول اللہ امابعد !

روزے دار کے لیے اس کے مرض کے مطابق فیصلہ کیا جاتا ہے، یعنی بعض حالات میں اس کے لیے روزہ چھوڑنا جائز ہوتا ہے اور کبھی ناجائز، اسی طرح کبھی اس کے لیے روزہ چھوڑنا واجب ہوتا ہے اور کبھی افضل۔ یہ مریض اور بیماری کے حساب سے حکم لگایا جاتا ہے۔

شیخ صالح العثیمین رحمہ اللہ فرماتے ہیں کہ:

’’بعض امراض سے روزہ متاثر نہیں ہوتا، مثلاً زکام یا ہلکا سردرد یا دانت کا درد اور اس جیسے دیگر امراض، ان امراض سے روزہ ترک کرنا حلال نہیں‘‘۔

اگرچہ بعض علماء اس آیت کریمہ {ومن کان مریضا} کو سامنے رکھتے ہوئے ترک روزہ کو درست قرار دیتے ہیں، لیکن ہم کہتے ہیں بے شک یہ حکم معلل بعلۃ ہے، وہ یہ ہے کہ اگر روزہ ترک کرنے میں اس کے لیے آسانی ہو تو ہم کہیں گے کہ روزہ ترک کر نا افضل ہے اور اگر روزہ رکھنے سے اس کا مرض متاثر نہیں ہو گا تو اس پر روزہ رکھنا واجب ہے اور روزہ چھوڑنا جائز نہیں۔

دوسری حالت یہ ہے کہ جب روزہ اس پر شاق ہو مگر اسے تکلیف نہ پہنچائے تو روزہ رکھنا یا ترک کرنا چاہے تو اس کی مرضی ہے۔

تیسری صورت یہ ہے کہ جب روزہ اس پر شاق ہو اور اسے ضرر پہنچنے کا اندیشہ ہو، مثلاً بہت زیادہ بیمار آدمی، یا شوگر کا مریض، یا اس جیسے دیگر امراض ہوں تو اس صورت میں روزہ رکھنا حرام ہے۔ یعنی ایسا مرض جو ہلاکت کا سبب بنتا ہو، خواہ وہ شوگر کا مرض ہو یا کوئی اور مرض ہو، مگر جب مریض کو اس کی بیماری سے کوئی نقصان پہنچنے کا اندیشہ نہ ہو، جبکہ اسے کوئی مستند ڈاکٹر روزہ رکھنے کی اجازت بھی دے دے تو اس پر روزہ رکھنا ضروری ہے۔ 

واللہ اعلم بالصواب

الشیخ ابو عمیر السلفی حفظہ اللہ

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: